Awesome, Successful Mindset

کروڑپتی بننے کے7 آسان، سادہ اور مکمل جائز اصول

Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on StumbleUponPin on PinterestShare on LinkedIn

کچھ عرصہ قبل  کیتھ لین الکنز کا ایک دلچسپ آرٹیکل پڑھنے کا اتفاق ہوا جس میں 20 سالہ نوجوانوں کو اگلے 10 سالوں میں کروڑ پتی بننے کے گر بتائے گئے ہیں۔ اگرچہ اس بات کی ضمانت تو نہیں دی جاسکتی کہ ان پر عمل کرکے ہر کوئی کروڑوں اربوں روپے کمالے گا لیکن ان اصولوں پر عمل کرکے زندگی بہتر بنائی جاسکتی ہے اور آپ بھی اپنی آمدنی میں اضافہ کرکے فیملی کا مستقبل محفوظ بنا سکتے ہیں۔

محنت کرکے امیربننے والے  سٹیو   سی-بولڈنے 1200 ارب پتی لوگوں کی زندگی پر ریسرچ کی ہے وہ  کہتےہیں کہ آپ جتنا چاہے کما سکتے ہیں ، یہ سب آپ کی محنت اور عقلمندی پر منحصر ہے۔  یہاں پر گرانٹ کاردونے  کا ذکر کرنا بھی بے حد ضروری ہے جو 21 سال کی عمر میں شدید مالی مسائل کا شکار اور مقروض ہوچکے تھے تاہم جب انہوں نے اپنی 30ویں سالگرہ منائی تو دنیا انہیں ارب پتی انسان کے طور پر جان چکی تھی! اس طرح کی بہت سی مثالیں موجود ہیں،  آیئے  جانتے ہیں ان 7 اہم اصولوں کو جن پر عمل کرکے ہر کوئی امیر بننے کی کوشش کر سکتا ہے۔

  1. ایک سے زائد ذرائع آمدنی پیداء کریں: گزشتہ سالوں میں ارب پتی افراد پر کی گئی تحقیق میں انکشاف ہوا ہے کہ ان میں سے 65 فیصد افراد کم ازکم 3 ذرائع سے آمدنی حاصل کر تے رہے ہیں جبکہ 45 فیصد کے 4 اور 29 فیصد ے 5 یا اس سے زائد ذرائع آمدنی ہیں۔  ایک سے زائد ذرائع آمدنی کا ایک اور فائدہ یہ بھی ہے کہ اگر خدانخواستہ ایک ذریعہ مثلاً ملازمت ختم بھی ہوجائے تو متبادل ذریعہ آمدنی سے انسان مالی مشکلات بچ جاتاہے۔
  2. سرمایہ کاری بہت ضروری ہے: اگر بچت کی رقم ایک تجوری میں رکھ دی جائے تو یہ اس کا صحیح استعمال نہیں۔ ملازمت پیشہ  افراد  سٹاک مارکیٹ میں سرمایہ کاری کرسکتے ہیں، کسی اچھی ہاؤسنگ سکیم میں قسطوں پر سستے  پلاٹ خرید سکتے ہیں یا پھر قابل اعتبار دوست کے ساتھ کاروبار میں پارٹنر بن سکتے ہیں۔ اچھی سرمایہ کاری سے بہت کم محنت سے زیادہ کمائی ممکن ہے۔
  3. درست فیصلے کرنا سیکھیں: 22 کی کم عمر میں ارب پتی بن کر دنیا کو حیران کرنے والے ٹکر ہیوز کہتے ہیں کہ امیر بننے کا خواب دیکھنے والوں کو فیصلہ سازی کی صلاحیت بہترین بنانے کی ضرورت ہے۔ انہیں ہر وقت پلاننگ کرتے رہنا چاہیئے جس میں ناکامی کی صورت میں متبادل منصوبہ بھی شامل ہو۔ بالکل ایسے ہی جیسے آپ کو یہ تو معلوم ہی ہوتا ہے کہ ہر روز ناشتے میں کیا کھانا ہے اور کون سا لباس پہن کر دفتر جانا ہے۔
  4. نمود ونمائش سے گریز کریں: جب آمدنی بڑھ جائے تو دکھاوے کیلئے غیر ضروری چیزیں خریدنے سے گریز کریں۔ امیر افراد کی فہرست میں شامل کاردونے کروڑ پتی ہوکر بھی پرانی ٹویوٹا کار چلاتے تھے۔انہوں نے اپنے کاروبار کو مزید ترقی دینے کی خاطر قیمتی گاڑی اور گھڑیاں نہیں خریدیں۔ ہمارے ہاں خاص طور پر شادیوں پرفضول خرچی عام ہے۔ ہم یہ نہیں کہتے کہ امیر بننے تک شادی ہی نہ کریں لیکن کفایت شعاری سے بھی تو  شادی کرنا ممکن ہے۔ اس طرح بچائے گئے پیسوں سے ”کروڑ پتی ہائی وے“ پر تیزی سے سفر کرنا سکیں گے۔
  5. جیتنے کیلئے سیکھنا بہت ضروری ہے: تیز ترین کھلاڑی یوسین بولٹ کو تیز رفتاری سے دوڑکر میڈل جیتتے ہوئے تو پوری دنیا دیکھتی ہے لیکن اس  جیت  کیلئے وہ جس قدر محنت کرتا ہے،  اس پہلو کو عام لوگ نہیں جانتے۔کیریبئن کرکٹر   کرس گیل کے زوردار سٹروکس مخالف ٹیم کے چھکے چھڑا دیتے ہیں لیکن ایسا کرنے کیلئے گیل کو گھنٹوں پریکٹس کرنا پڑتی ہے۔ جیتنے کیلئے سیکھنا ضروری ہے اور یہ اصول صرف کھیل کے میدان میں ہی نہیں کام آتا بلکہ یہ تو زندگی کا اہم اصول ہے۔ ماہرین کہتے ہیں کہ زیادہ آمدنی کے خواہش مند افراد کو ہر روز کم ازکم 30 منٹ تک مطالعہ کرنا  چاہیئے۔ اخبار کا بزنس پیج ضرور پڑھیں تاکہ آپ سٹاک مارکیٹ، پراپرٹی کی قیمتوں میں اتار چڑھاؤ اور قومی و بین الاقوامی معیشت سے باخبر رہیں۔ اس کے علاوہ انٹرنیٹ پر  کروڑوں معلوماتی  مضامین موجود ہیں جو آپ کو کروڑ پتی بننے میں مدد دے سکتے ہیں۔ یو ٹیوب پر زیادہ آمدنی حاصل کرنے کی مفید ویڈیوز کی بھی کوئی کمی نہیں۔
  6. کاروبارملازمت سے بہتر ہے: دنیا کے امیر ترین افراد کی فہرست میں ذاتی کاروبار کرنے والے افراد ہی سب سے زیادہ اور سر فہرست ہیں۔ ملازمت میں یقینی ماہانہ آمدن، چھٹیاں،بونس  اور دیگر مراعات شامل ہیں مگر اس طریقے سے 20 سال کی عمر میں کیریئر کا آغاز کرنے  والے نوجوان  کااگلے 10 سالوں میں کروڑ پتی بننا کافی مشکل ہے۔دوسری طرف آپ ملک ریاض حسین  کی مثال لے سکتے ہیں۔ بحریہ ٹاؤن کا مالک اگر کاروبار کےبجائے کسی کمپنی  میں نوکری کو ترجیح دیتا  تو آج شائد ہی  کوئی  اسے جانتا!
  7. کامیاب لوگوں کو دوست بنائیں: جن لوگوں کے دوست ان سے زیادہ کامیاب کاروبار کر رہے ہیں انہیں حسد کرنے کے بجائے اس بات پر فخر اور خوشی ہونی چاہیئے۔ کامیاب لوگوں کی صحبت اختیار کریں، ان سے خوشگوار انداز میں گفتگو کریں اور ان کے کامیاب فیصلوں سے سبق حاصل  کریں۔ اس طرح ایک دن آپ بھی زیادہ آمدنی حاصل کرنے والے افراد کی فہرست میں شامل ہوجائیں گے۔
Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on StumbleUponPin on PinterestShare on LinkedIn